Amazing Health Benefits of Banana کیلے کے حیرت انگیز صحت کے فوائد

Amazing Health Benefits of Banana in Urdu

کیلوں کی ہما ری زندگی میں اتنی اہمیت کیوں؟

یوں توپوری کائنات ہی خداکے کرشموں سے بھر ی پڑی ہے۔۔۔جدھر بھی نظردوڑائی جائے انسان کی عقل دنگ رہ جاتی ہے۔ اس طرح خداکے کرشموں اور نعمتوں میں سے ایک چھوٹاساپھل جس کے فوائدکے بارے میں ہم نے کبھی نہیں سوچا ہوگا۔بلکہ ہزاروں افراد صرف مزے کیلئے ہی کیلے کھاتے ہیں اس کی افادیت سے بالکل نا واقف ہو تے ہیں۔یہ نا قا بل یقین بات ہے کہ دنیا بھر کے (107) ممالک میں کیلے کی پیداوار میں اضافہ ہوا ہے اور یہ دنیابھرمیں چوتھے نمبرپرسب سے زیادہ قیمتی فصل کی نمائندگی کرتاہے۔صرف اسی ایک بات سے آپ اندازاہ لگا سکتے ہیں کہ کیلے دنیا بھر میں کتنے مقبول ہیں۔

پوٹا شیم حا صل کرنے کا مزیدار پیکیج:۔

کیلے صحتمندپوٹاشیم،ریشہ،وٹامن سی اور (B6) سے بھرے ہوتے ہیں۔پوٹاشیم ایک اہم غذائی اجزاء ہے۔جس کی جسم میں موجودہر سیل کو ضرورت ہو تی ہے۔کیلے جسمکوتوانائی فراہم کرتے ہیں تاکہ جسم میں موجود خلیات صحیح طریقے سے اپنا کام سرانجام د ے سکیں۔یہ آپ کے دل کی شرح کومستحکم رکھنے میں مدد دیتاہے۔خو ن میں شوگرکوکنٹرول کرنا۔کیلے انسو لین کی ربائی کو روکتا ہے،اور بلڈ پریشرکوبھی کنٹرول کرتا ہے۔

صحتمندلوگو ں کو روزانہ ( 3500mg) سے (mg 4700)کے درمیان پوٹاشیم کھا نے کی تجویزدی جا تی ہے،لیکن یہ ان کے روزمرہ زندگی کے عوامل پر منحصر کرتا ہے۔ایک اوسط کیلے میں تقریباً (450mg) غذائیت موجود ہوتی ہے۔

صحت مند بلڈ پریشر حا صل کر نے کا بہترین ذریعہ:۔

ہم میں سے بہت سے لوگ جواپنا بلڈ پریشر کم کرنے کے بارے میں اگر سوچتے ہیں توسب سے پہلے سوڈیم کی مقدار میں کمی کرتے ہیں لیکن حقیقت میں،سوڈیم اورپوٹاشیم کابیلنس ہی بلڈ پریشرکوکنٹرول کر نے میں مدد دیتا ہے۔ایک تحقیق کے مطابق ہم سب روزمرہ کے کھانوں سے (% 2 ) پوٹاشیم حا صل کرتے ہیں۔ پوٹاشیم کی مناسب مقدار 20% شرح اموات میں کمی کا باعث بنتی ہے۔پوٹاشیم جسم کو بیماریوں کے حملے، بلڈپریشرکونارمل کرنے اور گردوں سے پتھری کے عمل میں کمی لانے کا باعث بنتے ہیں۔جس کا مطلب یہ کہ پوٹاشیم ہمارے جسم میں توازن کو قائم رکھنے کیلئے بہت اہم ہے اور پوٹاشیم حاصل کرنے کا سب بڑا ذریعہ کیلا ہے ، جو کہ ہمیں بہت سی بیماریوں سے محفوظ رکھتا ہے۔

کینسر کے خطرے کو کم کرنا:۔

تازہ پھلوں کااستعما ل کینسر کے خطرے کو کم کرتا ہے۔کیونکہ پھلوں میں کوئی بھی نقصان دہ عناصرجیسے نمک،چینی،کھانے کے رنگ اوردوسرے کیمیکل وغیرہ شامل نہیں ہوتے ہیں۔ایک تحقیق کے مطابق کیلے کا اعتدال میں رہ کر استعمال، گردوں کے کینسر سے تحفظ میں مدد کرتا ہے۔سبزیوں او رپھلوں کا مناسب استعمال چالیس فیصد تک کینسر کے خطرے میں کمی کا باعث بنتا ہے۔

اسکے علاوہ (Vitamin C)کوحاصل کرنے کاکیلا ایک بہترین ذریعہ ہے۔ (Vitamin C) کینسر کے قیام کو روکنے میں مدد دیتا ہے۔ایک تحقیق کے مطا بق کیلے کی بہترین غذائیت بڑی آنت کے کینسر کے خطرے کو کم کرتی ہے۔

دل کی صحت کو بڑھا ئے:۔

ایک درمیانے درجے کے کیلے میں تقریباً 400 سے 300 ملی گرام پوٹاشیم پایا جاتاہے۔جس سے پوٹاشیم کی روزانہ کی تقریباً 10% ضرورت پوری ہو تی ہے۔اور جیسا کہ ہم جانتے ہیں کہ سوڈیم کی زیادہ مقدار دل پر منفی اثر ڈالتی ہے۔سوڈیم کو کم کرنے اور پوٹاشیم کو بڑھانے سے ممکنہ طور پر ایک تبدیلی ہو تی ہے۔ کیلے میں سوڈیم کی مقدار کم اور پوٹاشیم کی مقدار زیادہ ہوتی ہے۔ یہ امتزاج بلڈ پریشر کو کنٹرول کرنے میں مدد دیتا ہے اوردل کی بھی بہت سی بیماریوں سے محفوظ رکھنے میں مدد دیتا ہے۔کیلے میں دل کو مضبوط بنانے کیلے اہم غذائیت، مثلاً (Vitamin C ) اور (B6) موجود ہوتاہے۔

معدے کی خرابی:۔

عام طور پرڈاکٹرز معدے کی خرابی والے لوگوں کو(کیلے،چاول اور ٹوسٹ)جیسی غذائیں کھانے کی تجویزدیتے ہیں۔ کیلے آسانی سے ہضم ہونے والی غذاء ہے۔کیلے کی غذائیت معدے کی خرابی کو دور کرنے میں مدد گار ثابت ہوتی ہے۔کیلے میں فائبر کی بھرپور مقدار ہو نے کی وجہ سے قبض سے تحفظ حاصل کیا جاسکتا ہے۔کیلے میں موجود قدرتی مٹھاس پیٹ کو جلد بھرنے میں بھی مدد دیتا ہے۔

کیلے روزانہ کیو ں نہیں کھانے چاہیے؟

جو لوگ بِیٹابلاکس لے رہے ہیں انہیں کیلے کھانے میں اعتدال پسندی سے کام لینا چاہیے کیونکہ بِیٹا بلاکس پوٹاشیم کی سطح میں اضافہ کرتے ہیں اور بہت زیادہ پوٹاشیم ان لوگوں کیلئے خطرناک ہے جن کے گردے بہتر طورپرکام نہیں کر تے۔ایک خیال کے مطا بق وہ لو گ جو آدھے سر کے درد کی بیماری میں مبتلاہیں ان کو روزانہ آدھا کیلا کھانا چاہیے۔وہ لوگ جنہیں کیلے سے الرجی ہے جس کے اثرات خارش، سوجن وغیرہ ہو وہ بھی اسے مکمل طور نظراندازکریں۔

کیلوں کو کھانے کی حد:۔

روزانہ پوٹاشیم کو لینے کی مقدار ہر انسان کے لیے مختلف ہے۔لیکن اگر آپ روزانہ ( 7سے8) کیلے کھاتے ہیں توآپ اپنی دن بھرکی پوٹاشیم کی ضرورت کو پورا کرسکتے ہیں۔بہت زیا دہ پوٹاشیم لینے سے آپ کے دل پر تباہ کن اثر ات مرتب ہو سکتے ہیں۔ لیکن اس خطرناک حد تک پہنچنے کے لیے ایک صحت مند شخص کو روزانہ ( 400) کیلے کھانا ہو نگے۔جب آپ اپنے روزانہ کے کھانے پر غور کر تے ہیں تو یاد رکھیں کہ بہت سے دیگر کھا نے کیلے سے بھی زیادہ پوٹاشیم فراہم کرتے ہیں۔جس میں شکر کندی ،آلو ، ٹماٹر ،پالک ،تربوز ،چقندر ،کالی اور سفید لوبیا ،سامن مچھلی ،کدو ،سفید چوکندر اور سادہ دہی وغیرہ۔

لیکن اگرآپ ایک صحتمندانسان ہیں اورمتوازن غذاء کھاتے ہیں توآپ دن بھرمیں (10) کیلئے تک کھاسکتے ہیں۔

کیلے میں بہت سے وٹامنز اور منرلز پائے جاتے ہیں۔مثلاً

وٹامن بی 6 0.5mgمیگنیز0.3mg
وٹامن سی 0.9mgپوٹاشیم450mg
غذائی فائبر 3mgپروٹین1mg
میگنیشیم 34mgفولیٹ25.0mg

(100mg) کیلے میں پائے جانے والے اجزاء:۔

کیلیریز 89واٹر75%
پروٹین 1.1gکاربز22.8g
شوگر 12.2gفائبر2.6g
فیٹ 0.3gسیچوریٹیڈ0.11g
اومیگا - 3 0.03gاومیگا - 60.05g